film-mamata_banerjee-again-dau_gave-number-movie-stars-lok_sabha-elections

ممتا بنرجی کا پھر فلمی دنیا پر داؤ، لوک سبھا انتخابات میں کئی فلمی ستاروں کوٹکٹ دیا

ممتا بنرجی کا پھر فلمی دنیا پر داؤ، لوک سبھا انتخابات میں کئی فلمی ستاروں کوٹکٹ دیا

نئی دہلی، 14 مارچ (آئی این ایس انڈیا)

لوک سبھا انتخابات کامعرکہ تیارہوچکاہے۔انتخابات کی تاریخوں کے اعلان کے ساتھ ہی سیاسی جماعتیں امیدواروں کی فہرست کو حتمی شکل دینے میں لگ گئی ہیں۔مغربی بنگال کی بات کریں تو ریاست میں حکمران ترنمول کانگریس یعنی ٹی ایم سی اس بار بھی لوک سبھا انتخابات میں فلمی ستاروں کو میدان میں اتارنے جارہی ہے۔بنگالی فلم کی مشہور اداکارہ ممی چکرورتی پہلی بار سیاست میں قدم رکھنے جا رہی ہیں،وہ 2019 کے انتخابات میں ممتاز جادو پور حلقہ سے اپنی قسمت آزمائیں گی تو وہیں بنگالی فلم اداکارہ نصرت جہاں مغربی 24 پرگنہ ضلع میں بسیرہاٹ سیٹ سے الیکشن لڑیں گی،ابھی اس سیٹ سے ترنمول کے ادریس علی ایم پی ہیں۔ان دو اداکاروں کے علاوہ موجودہ ایم پی دیپک ادھیکاری، شتابدی رائے اور منمن سین بھی ایک بار پھر میدان میں اتریں گی۔
دیپک ادھیکاری دیو کے نام سے مقبول ہیں،دیو اور رائے بالترتیب گھاٹل اور بیربھوم سیٹوں سے دوبارہ انتخاب لڑیں گے، وہیں سین کو بانکرا سے آسنسول منتقل کر دیا گیا ہے،یہ سیٹ بی جے پی کے گلوکار ایم پی-سیاستدان بابل سپریو نے جیتی تھی، اگرچہ ترنمول نے معروف مصور اور موجودہ ایم پی تاپس پال اور شام رائے کو اس بار موقع نہیں دیا ہے۔پال کو 2016 دسمبر میں سی بی آئی نے روز ویلی چٹ فنڈ گھوٹالے میں گرفتار کیا تھا، جو اب ضمانت پر رہا ہیں۔آپ کو بتا دیں ترنمول کانگریس نے متھن چکرورتی کو راجیہ سبھا کا رکن پارلیمنٹ بھی بنایا تھا لیکن خراب صحت کا حوالہ دیتے ہوئے انہوں نے دسمبر 2016 میں استعفی دے دیا تھا۔غور طلب ہے کہ 2014 میں بھی ممتا بنرجی کی پارٹی ترنمول کانگریس نے پانچ فلمی ستاروں کو میدان میں اتارا تھا،سب نے اپنی اپنی سیٹوں پر کامیابی حاصل کی تھی،پارٹی کی کئی بڑی عوامی میٹنگوں میں بھی ٹیلی ویژن اور فلم دنیا کی ہستیاں نظر آتی ہیں۔آپ کو بتا دیں کہ مغربی بنگال کی وزیر اعلی ممتا بنرجی نے دو دن پہلے ہی لوک سبھا انتخابات کے لئے ٹی ایم سی امیدواروں کا اعلان کیا تھا۔ممتا بنرجی نے کہا کہ اس بار پارٹی نے 41فیصد خواتین کو ٹکٹ دیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں