india-sri_lanka-changed-since-government-changed-raj_bishche

2014 میں حکومت تبدیل ہونے کے بعد سے ہند-سری لنکا تعلقات میں کمی آئی: راج پکشے

2014 میں حکومت تبدیل ہونے کے بعد سے ہند-سری لنکا تعلقات میں کمی آئی: راج پکشے

بنگلور،09 ؍فروری (آئی این ایس انڈیا)

سری لنکا کے حزب اختلاف کے رہنما مہندا راج پکشے نے ہفتہ کو یہاں کہا کہ 2014 میں نئی دہلی میں نئی حکومت کے قیام کے بعد سے ہندوستان اور ان کے ملک کے دو طرفہ تعلقات میں کمی آئی۔حالانکہ اب ان کی قیادت والے اپوزیشن اتحاد اور ہندوستان کی حکمراں پارٹی کے درمیان اچھے تعلقات ہیں۔انہوں نے زور دیتے ہوئے کہا کہ ہندوستان سری لنکا کے تعلقات کو لے کر ہونا چاہیے کہ اگر ایک نئی حکومت کا ان کے ملک کے ساتھ تعلق ہے تو آنے والی حکومت کو بھی اسے جاری رکھنا چاہئے۔انہوں نے کہا کہ گزشتہ تجربات سے واضح ہے کہ اقتدار کی تبدیلی کے فورا بعد ہمارے دو طرفہ تعلقات میں کمی ہوئی ہے۔ دونوں ممالک کے لئے ایسے معاملے سے سنگین نتائج سامنے آسکتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ دونوں ممالک نے خودمختاری،باہمی فائدے اور پرامن بقائے باہمی کے اصولوں کا ہمیشہ احترام کیا اور اس پر کھڑے رہے۔گزشتہ سال اکتوبر میں متنازعہ طور پر راج پکشے کو وزیر اعظم مقرر کر دیا تھا۔اس سے ایک بے مثال آئینی بحران پیدا ہو گیا تھا جو تقریبا 50 دن تک چلا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں